کوئٹہ: پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر اور سابق وزیراعظم محمد نواز شریف نے کہا کہ ملک میں پچھلے 70سالوں سے مائنس پلس کا بڑا کھیل ہوچکا ہے،ووٹ کے تقدس کو بحال کریں،آمروں سے پی سی اوکاحلف لینے والے صادق اورامین کافیصلہ کریں گے؟احتساب کے نام پر نوازشریف سے انتقام لیا گیا ہے،میری ساری سیاست نظریئے پر ہی اور رہے گی،احتساب کیلئے6 بہترین ہیرے چن کرجے آئی ٹی بنا ئی گئی،لیکن عوام نے یہ فیصلہ مسترد کردیا،کرکٹرخان سے پشاورمیں میٹرو نہیں بن سکی،ہم کوئٹہ میں میٹروبس بنائیں گے۔
انہوں نے کوئٹہ میں عوامی جلسہ سے خطاب کریتے ہوئے کہاکہ میری سیکیورٹی اللہ کے ہاتھ میں ہے۔بلٹ پروف شیشہ ہٹا دیا جائے۔شیشہ اس لیے ہٹوایا کہ آپ کو ٹھیک سے دیکھ سکوں۔انہوں نے کہا کہ کوئٹہ والوں میں قانون کی حکمرانی کوٹ کوٹ کر بھری ہے، انہوں نے نے ہمیشہ آمریت کا مقابلہ کیا ہے، بلوچستان کے لوگ سچے اور کھرے ہیں، ہر آزمائش اور مشکل میں پورے اترے ہیں، یہاں کے عوام نے کبھی پاکستان کا پرچم جھکنے نہیں دیا۔
نوازشریف نے کہا کہ مجھ سےاحتساب کے نام پر نوازشریف سے انتقام لیا گیاہے۔ 4 سالوں میں کرپشن کا کوئی اسکینڈل سامنے نہیں آیا، ایک پیسے کی کرپشن نہیں کی، اگر کی تو بتایا جائے لیکن پھر بھی نکال دیا گیا۔ نواشریف نے کہا کہ بیٹے کی کمپنی سے تنخواہ نہیں تو اس پر نکال دیا گیا۔ یہ بھی کوئی فیصلہ تھا، یہ فیصلہ کون دے رہے ہیں جو ہمیشہ پی سی او کے تحت آمروں سے حلف لیتے رہے۔
وہ مجھے کہہ رہے ہیں کہ تم صادق اور امین نہیں ہو۔ انہوں نے کہا کہ احتساب کیلئے 6 بہترین ہیرے چنے گئے ان کی جے آئی ٹی بنا ئی گئی۔ ایک ہی بینچ نے بار بارفیصلے کیے۔ کبھی دو کبھی تین اور کبھی پانچ ججوں نے فیصلہ دیا۔ شاید پاکستان کی تاریخ میں ایسا فیصلہ نہیں ہوا۔ ایک پیسے کی کرپشن کا شائبہ بھی نہیں ہوا۔ ثبوت تو دور الزام بھی ثابت نہیں ہوا۔
کسی سرکاری پیسے میں خرد برد کا الزام نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2018 میں عوام فیصلہ سناکرہمیں سرخروں کریں گے۔عوام سے وعدہ ہے اگر دوبارہ موقع ملا تو کوئٹہ کو پاکستان کا مثالی شہر بنائیں گے، جو کراچی، لاہور اسلام آباد اور پشاور سے کم نہیں ہوگا۔ مسلم لیگ کے صدر نے کہا کہ پشاور تو پہلے سے بھی زیادہ خراب ہوگیا ہے۔ کرکٹرخان نے کہا تھا شہبازشریف نے جنگلا بس بنائی۔اب وہی پشاور میں بنانے کی کوشش کررہا ہے لیکن پانچ سال ہونے کو ہیں۔کرکٹرخان سے پشاورمیں میٹرو نہیں بن سکی۔آپ سے وعدہ کرتے ہیں ہمیں موقع ملا توکوئٹہ میں میٹروبس بنائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں