اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ 2018میں الیکشن ہوتے نظر نہیں آرہے، حکومت جان بوجھ کر حلقہ بندیاں نہیں کر رہی، ساری قوم کی نظریں سپریم کورٹ ہیں کہ کوئی ایسا فیصلہ آئے جس سے سانپ بھی مر جائے اور لاٹھی بھی ٹوٹے،نجی ٹی وی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ حکومت کے ارکان اسمبلی اسے چھوڑ چکے ہیں۔ اب لیگی حکومت کوئی آئینی ترمیم لانے کی پوزیشن میں نہیں ہے۔ 30دسمبر سے پہلے حدیبیہ، ماڈل ٹائون کیس کافیصلہ ہو جائیگا، پاکستان میں اب عدلیہ اور فوج قانون و آئین کے ساتھ کھڑےہیں، حالات بدل چکے ہیں، این آر او کی کوئی گنجائش نہیں ہے، ساری شریف فیملی کو مائنس ہوتے دیکھ رہا ہوں۔ یہ جو نظر آتے ہیں وہ ہیں نہیں، ان میں لیڈرانہ صلاحیتیں ہی نہیں ہیں۔ نواز شریف کو ڈر ہے اگر انہیں سزا ہو گئی تو دنیا بھر میں اکٹھی کی ہوئی دولت بھی ہاتھ سے نکل جائے گی، وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے وزیر خزانہ کیلئے نام مانگ لئے ہیں۔ وہ قریبی دوستوں کو کہتے ہوئے پائے گئے ہیں کہ ڈار پھنسنے والا ہے، شریف خاندان سیاسی شہید بننے کیلئے ساری حرکتیں کر رہا ہے اور عدلیہ کو برا بھلا کہہ رہا ہے، اچکزئی کو آرمی چیف کے ایران جانے سے بڑی تکلیف ہوئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں