لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستانی نژاد برطانوی ٹیکسی ڈارئیور نے جمائما کو ایک ہزار سے زائد فون کالز اور میسجز کرکے ہراساں کرنے کا اعتراف کرلیا۔تفصیلات کے مطابق عدالت نے برطانوی ٹیکسی ڈارئیور 27 سالہ محمد حسن پر جمائما کو ایک سال تک فون کالز اور میسجز کرکے ہراساں کرنے کے الزام میں فرد جرم عائد کردی۔عدالت میں مقدمے کی سماعت کے دوران محمد حسن نے جمائما کو ہراساں کرنے کا اعتراف کیا اور بتایا کہ انہیں جمائما کا نمبر اس وقت ملا جب انہوں نےہالو سروس کے ذریعے ملزم کی ٹیکسی بک کروائی۔پراسیکیوٹر رخسانہ علی نے عدالت کو بتایا کہ ٹیکسی ڈرائیور کی جانب سے ایک سال کے دوران جمائما کو 1182 فون کالز اور203 میسجز اور اس کے علاوہ واٹس ایپ پر بھی بے شمار پیغامات بھیجے گئے۔انہوں نے عدالت میں بتایا کہ ٹیکسی ڈارئیور محمد حسن نے 18 مختلف موبائل فونز سے جمائما کو کالز اور میسجز بھیجے۔واضح رہے کہ ٹیکسی ڈائیور محمد حسن پرجج مارٹن ایڈمنڈ کیوسی اس مقدمے میں سز26 اکتوبر کو سنائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں