اسلام آباد (آئی این پی ) وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف نے امریکہ پر زور دیا ہے کہ افغانستان میں قیام امن کے لئے طالبان کے ساتھ مذاکرات کیے جائیں، امریکی انتظامیہ ناکام حکمت عملی پر عمل پیرا ہے، پاکستان ، چین، امریکہ او ر افغانستان سمیت چار ملکی گروپ میں ایسے ملکوں کو بھی شامل کیا جاسکتاہے جو طالبان میں اثرو رسوخ رکھتے ہیں۔ وال سٹریٹ جرنل سے ایک انٹرویو میں انہوں نے کہاکہ ٹرمپ انتظامیہ کیافغانستان میں فوجی حل کی سوچ ناکام پالیسی کی عکاسی کرتی ہے،جنگ زدہ ملک میں امن کی بحالی کے لئے طالبان کے ساتھ بات چیت کی جانی چاہیے۔ انہوں نے کہا اگر امریکہ خطے کے عسکریت پسند گروہوں میں اثرو رسوخ رکھنے والے ملکوں کے ساتھ ملکر کام کرے تو طالبان کے ساتھ امن مذاکرات کا اہتمام کیا جاسکتا ہے۔وفاقی وزیر نے کہا کہ امریکی انتظامیہ ناکام حکمت عملی پر عمل پیرا ہے۔خواجہ آصف نے کہا کہ ہم اقوام متحدہ کے ارکان کو بتائیں گے کہ اس علاقے میں امن بحال ہونا چاہیے اور اس مسئلے کا طاقت کے ذریعے حل ممکن نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان ، چین، امریکہ او ر افغانستان سمیت چار ملکی گروپ میں ایسے ملکوں کو بھی شامل کیا جاسکتاہے جو طالبان میں اثرو رسوخ رکھتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں