اسلام آباد(مانیڑنگ ڈیسک)نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے صحافی صابر شاکر نے کہا ہے کہ (ن) لیگ کا ابھی تک وہی پروگرام ہے کہ وہ فوج سے ٹکرائیں گے، عدلیہ سے ٹکرائیں گے اور اداروں سے ٹکرائو کریں گے، یہ پروگرام آج کل انہوں نے ہولڈ کرکے رکھا ہوا ہے۔(ن) لیگ چاہتی ہے کہ این اے 120 کا الیکشن ہو جائے تو پھر وہ جارحانہ پالیسی پر آ جائیں گے، صابر شاکر نے کہا کہ کل مریم نواز نے اپنی تقریر میں ایسے نعرے لگوائے تھے جس پر نہ تو اپوزیشن میں سے کوئی بولا اور نہ ہی کسی نے اس کا نوٹس لیا، مریم نواز نے پاکستان کے بارے میں نعرے لگوائے کہ کیا آپ کو ایسا پاکستان منظور ہے ؟ جس کے جواب میں لیگی کارکنان نے کہا کہ انہیں ایسا پاکستان منظور نہیں، اس بات پر سب خاموش ہیں اور کسی نے اس پر آواز نہیں اٹھائی، اگر یہی کام کوئی اور جماعت، ایم کیو ایم، اے این پی، بی این پی وغیرہ کرتی تو اس پر ادھم مچا ہوا ہوتا ۔ قبل ازیں مریم نواز کا نون لیگ اقلیتی ونگ کے کنونشن سے خطاب میں کہنا تھا کہ این اے 120 کے ضمنی الیکشن میں ڈبے کھلے تو شیر ہی نکلے گا۔ مریم نواز نے نواز شریف کے چوتھی بار وزیر اعظم بننے کا دعویٰ بھی کر دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان نے ملک کو سازشوں کے سوا کچھ نہیں دیا۔ مریم نواز نے ملک میں کرکٹ کی بحالی کا کریڈٹ نواز شریف کو دیتے ہوئے کہا کہ 2013ء میں کھیل کے میدان ویران پڑے تھے، نواز شریف کی 4 سالہ محنت کے بعد کھیلوں کے میدان آباد ہو گئے۔ انہوں نے نام لئے بغیر عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ وہ لندن میں شادیاں بھگتا رہے ہیں جبکہ پشاور میں ڈینگی کے وار جاری ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں