کراچی،لاہور،لندن( آن لائن) سابق قومی کپتان یونس خان نے کہا کہ انہوں نے پی سی بی کی جانب سے الوداعی تقریب میں شرکت کیلئے لاہور جانے کا کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے۔ایک انٹرویو میں یونس خان نے کہاکہ میں یہ نہیں بتا سکتا کہ 14 ستمبر کو لاہور میں بورڈ کی جانب سے الوداعی تقریب کا حصہ ہوں گا یا نہیں،یونس خان نے کہا کہ الوداعی تقریب کے معاملے میں پی سی بی نے بہت دیرکردی اورکئی دیگر لوگ بازی لے گئے، مجھے بورڈ کی طرف سے بڑی رقم دینے کی پیشکش بھی ہوئی ہے،میں آج جو کچھ بھی ہوں اس پر پی سی بی کا شکریہ ادا کرنا چاہوں گا، مجھے نہیں لگتا کہ 14 ستمبر کو لاہور میں ہوں گا باقی جو اللہ تعالی چاہے بندے کی کوئی اوقات نہیں ہے۔دریں اثناء ورلڈ الیون کی مستحکم بیٹنگ لائن پر کاری ضرب لگانے کیلئے پیس ہتھیار تیار کرلیے گئے۔آزادی کپ سیریز میں مضبوط ورلڈ الیون کا سامنا کرنے کیلئے گرین شرٹس کی تیاریاں عروج پر پہنچ گئی ہیں،تربیتی کیمپ کے تیسرے روز 3گھنٹے کا طویل پریکٹس سیشن قذافی اسٹیڈیم لاہورکی مصنوعی روشنیوں میں ہوا، کیریبیئن لیگ کھیل کر واپس آنے والے شاداب خان اور شادی کی تقریبات کے بعد رومان رئیس نے بھی اسکواڈ کو جوائن کرلیا، ادھر گھرمیں ننھے مہمان کی آمد کے منتظر محمد عامر کی واپسی کے حوالے سے صورتحال ابھی تک واضح نہیں ہے، مہمان ٹیم کی مستحکم بیٹنگ لائن کے سامنے تجربہ کار پیسر کی کمی محسوس ہوگی۔علاوہ ازیں منفرد انداز کے حامل انتہائی سینئر انگلش کرکٹ کمنٹیٹر ہینری بلوفیلڈ ریٹائر ہوگئے۔ سینئر انگلش کرکٹ کمنٹیٹر ہینری بلوفیلڈ برطانوی نشریاتی ادارے کے ’ٹیسٹ میچ اسپیشل‘ میں کمنٹری کیا کرتے تھے، ویسٹ انڈیز سے لارڈز ٹیسٹ کے اختتام پر انھوں نے بھی اپنا کیریئر ختم کردیا۔ 77 سالہ بلو فیلڈ نے خود بھی نوجوانی میں لارڈز میں ہی فرسٹ کلاس سنچری اسکور کی تھی، اسکول کے آخری دنوں میں وہ ایک خطرناک حادثے کا شکار ہوگئے جس کی وجہ سے 28 دن کوما میں رہے تھے، بعد میں وہ ہوش میں تو آئے مگر کھیلنے کے قابل نہیں رہے، اس لیے انھوں نے مائیک کے پیچھے سے اپنے شوق کی تکمیل کرلی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں