نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی ریاست فلوریڈا بحرالاقیانوس سے آنے والے سمندری طوفان ارما کے نشانے پرہے۔کیٹیگری تھری کا طوفان امریکی ساحلوں کیلئے خطرے کی گھنٹیاں بجارہاہے۔ جہاں پندرہ فٹ بلند لہریں اٹھ سکتی ہیں۔ جبکہ ایک سو بیس کلومیٹر فی گھنٹہ رفتار سے ہوائیںچل رہی ہیں۔فلوریڈا کا پچیس فیصد حصہ یعنی چھپن لاکھ افراد نقل مکانی پر مجبور ہے۔ تمام شیلٹرز بھی بھر چکے ہیں،ریاست میں افراتفری کا ماحول ہے ۔ دکانیں خالی کر دی گئی ہیں، اشیائے خوردونوش ذخیرہ کرلی گئی ہیں۔جبکہ عوام ریت کے تھیلوں سے بند بنانے میں مصروف ہیں۔ سمندری طوفان ارما کی آمد سے قبل فلوریڈا سےمنتقل ہونے والوں کی گاڑیوں سے ٹریفک جام ہے۔حکام کے مطابق ارمافلوریڈا یا اس کی ہمسایہ ریاستوں کے لیے تباہ کن ثابت ہو سکتا ہے۔ طوفان کا بڑا خطرہ فلوریڈا کے شہر میامی ہے، ساٹھ لاکھ آبادی کے اس شہر کو خالی کرایا جارہاہے۔اٹلانٹک اور اورلینڈو میں مسلمانوں نے مساجد اور دیگر مراکز عارضی پناہ کے لیے کھول دیئے ہیں۔ پورٹو ریکو اور جنوبی و شمالی کیرولائنا کے بعد ورجینیا اور الاباما ریاستوں میں بھی ہنگامی حالت کا اعلان کر دیا گیا ہے۔بحراقیانوس میں رواں سال تین طوفان ارما، ہوزے اور کاٹیا اٹھ رہے ہیں،شمال میں طوفان ہوزے ارما کے ساتھ اٹلانٹک میں بڑھ رہا ہے اور یہ کیٹیگری فور کا طوفان دو سو چالیس کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے آ رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں