لاہور(آن لائن)مریم نواز نے این اے 120 کے ضمنی انتخاب کے سلسلے میں تاجر کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عزت افزائی پر دل کی گہرائیوں سے شکریہ ادا کرتی ہوں۔ ساری دنیا دیکھے گی 17 ستمبر کو شیر کیسے دھاڑتا ہے۔ مریم نواز نے کہا کہ میں تاجر برادری کی عدالت میں نواز شریف کی ریویو پٹیشن لائی ہوں، نواز شریف کی نظر ثانی کی اپیل کا فیصلہ عوام 17 ستمبر کو کرے گی۔انہوا4161 نے کہاکہ جب عوام نواز شریف کو ووٹ دیکر لاتی ہےتو جلا وطن کیا جاتا ہے یا جیلوں میں ڈالا جاتا ہے، نواز شریف کو ٹوٹا پھوٹا پاکستان دیتے ہیں اور نواز شریف ایک ابھرتا اور ترقی کرتا پاکستان دیکر جاتا ہے، گزشتہ الیکشن مہم کے دوران 80 فیصد گلیاں اندھیرے میں ڈوبی ہوتی تھیں، جب نواز شریف کی الیکشن مہم چلاتی تھی تو 80 فیصد سڑکیں ٹوٹی پھوٹی تھیں۔ جب 2013ء میں نواز شریف کی الیکشن مہم چلاتی تھی گھروں میں اندھیرا ہوتا تھا، کون ہے جس نے پاکستان سے لوڈ شیڈنگ کے اندھیروں کو مٹایا؟ آج پاکستان اندھیروں سے نکل آیا ہے، نواز شریف کو جب نااہل کیا گیا تو ترقی کرتی سٹاک ایکسچینج زمین پر آنے لگی جس سے پتہ چلتا ہے کہ پاکستان کی ترقی اور نواز شریف کا رشتہ بہت گہرا ہے، یہ رشتہ توڑا نہیں جا سکتا، ملک کو نواز شریف کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ عقلمندوں کو سمجھ آ رہی ہے مگر مہروں کو سمجھ نہیں آ رہی ہے، پاکستان بدل رہا ہے، اب پانامہ اور اقامہ کی سیاست نہیں چلے گی، لاہور سے ووٹ مانگنے والے کہہ رہے ہیں شکر ہے پاکستان کی حکومت نہیں ملی ورنہ پاکستان کا حال بھی خیبر پختونخوا جیسا ہوتا، لاہور میں لاہور کی باتیں کرنیوالے باہر جا کر اسے گالی کیوں دیتے ہیں۔ لاہور پولیس کو گالیاں، میٹرو کو جنگلہ بس کیوں کہتے ہیں؟ لاہور سے ووٹ مانگنے والے لاہور سے باہر جا کر لاہور کو گالی کیوں دیتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں