لاہور :سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے یکم ستمبر 2017ء کو سیکرڈ ہارٹ کیتھیڈرل لاہور کا دورہ کیا جس پر فادر فرانسیس گلزار کا بیان سامنے آ گیا ہے ۔ چرچ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ میں فارد فرانسیس گلزار وکر جنرل چرچ کے ترجمان کی حیثیت سے وضاحت کرنا چاہتا ہوں کہ محترمہ مریم نواز یکم ستمبر کو چرچ میں تشریف لائیں۔
اس سے دو روز قبل وزیر کامران مائیکل، خلیل طاہر سندھو نے بشپ صاحب سے درخواست کی کہ محترمہ مریم نواز اپنی والدہ کی صحت یابی کے لیے چرچ آنا اور دعا کروانا چاہتی ہیں۔ خدا کا گھر دعا کا گھر کی بات کو مد نظر رکھتے ہوئے چرچ انتظامیہ نے مریم نواز کو آمد کی اجازت دے دی۔ متفقہ رائے سے طے یہ پایا کہ مریم نواز اپنے لیے ، اپنے والد اور دوسرے خاندان کے افراد کا مسیحی اسکولوں سے تعلیم حاصل کرنے پر شکریہ ادا کریں گی لیکن شکریہ کے بعد ان کی گفتگو سیاسی ہو گئی جس پر ہم سب کی بہت دل آزاری ہوئی۔
ان کی گفتگو سے ہمارے دل کو ٹھیس پہنچی ہے جس کے لیے فضلت مآب آرچ بشپ سبسٹئن فرانس شاء خود اور چرچ انتظامیہ معذرت خواہ ہے۔ انہوں نے بتایا کہ اب یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ بلا شبہ دعا کے لیے چرچ کے دروازے سب کے لیے کھُلے ہیںم لیکن آئندہ چرچ کو کسی سیاسی پلیٹ فارم کے تحت استعمال ہونے نہیں دیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں