اسلام آباد: نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے سینئیر صحافی عارف نظامی نے کہا کہ شہباز شریف لندن دراصل نواز شریف سے ملاقات کرنے کے لیے جا رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ شہباز شریف نواز شریف کو سمجھائیں گے کہ وہ اپنے ارد گرد موجود خوشامدی لوگوں سے بچیں ۔ اور فوج کو یہ پیغام نہ دیں کہ وہ ان سے ٹکر لینا چاہتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ شہباز شریف نواز شریف کو وہی پیغام دیں گے جو محترمہ بے نظیر بھٹو نے دیا تھا اور بعد میں آصف علی زرداری نے بھی اُسے دہرایا اور وہ پیغام یہ ہے کہ جمہوریت بہترین انتقام ہے۔ شہباز شریف نواز شریف کو پیغام دیں گے کہ آپ سینیٹ کے الیکشن کروائیں اور اس کے بعد عام انتخابات ہونے دیں۔ عارف نظامی نے کہا کہ ملک کے لیے یہ نازک مراحل ہیں۔ کیونکہ اگر میاں صاحب نے جوش کی بجائے ہوش کا دامن نہ پکڑا تو ان کی پارٹی کے ساتھ ساتھ ملک کو بھی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ اگر ایسا ہوا تو ملک کی تمام سیاسی قوتیں اکٹھی ہونے پر مجبور ہو جائیں گی۔یہ بھی ہو سکتا ہے کہ عمران خان سب کے ساتھ اتحاد نہ کریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں