اسلام آباد (آئی این پی) پاکستان ایروناٹیکل کمپلیکس کامرہ نے آج ایک اور سنگِ میل عبور کیا جب پاکستان اور آزربائیجان ائیر فورس کے مابین دس سپر مشّاق طیاروں کی فروخت کا معاہدہ طے پا گیا آزربائیجان میںطے پانے والے اس تاریخی معاہدے کے موقع پر پاکستان کینمائندگی ائیر مارشل ارشد ملک ، چیئر مین پاکستان ایروناٹیکل کمپلیکس کامرہ اور آزر بائیجان کی نمائندگی آزربائیجان ائیر فورس کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل رمیز طائر اوف نے کی۔ اس معاہدے کے تحت پاک فضائیہ آزر بائیجان کے ہوابازوں اور تکنیکی عملے کی تربیت بھی کرے گی۔ اس معاہدے سے دونوں ملکوں کےدرمیان دفاعی تعاون مزید مستحکم ہوگا۔ پاکستان ایروناٹیکل کمپلیکس کامرہ میںتیار ہونے والا سپر مشّاق طیارہ جدید آلات اور صلاحیتوں سے لیس ہونے کی بدولت دنیا کے بہترین ملٹری تربیتی طیاروں میں شمار کیا جاتا ہے۔ یہاں تیار کئے جانے والے تقریباً تین سو طیارے پاک فضائیہ اور پاک آرمی کے پائلٹوں کی بنیادی تربیت اور دیگر دفاعی مقاصد کے لئے استعمال ہو رہے ہیں۔ حال ہی میں پاکستان نے ترکی ، نائیجریا اور قطر کو یہ طیارے برآمد کرنے کے معاہدوں پر دستخط کئے ہیں۔ پاکستان اور آزربائیجان کے مابین ہونے والے اس معاہدے سے نہ صرف ہوابازی کے آلات کو برآمد کرنے کے مزید میسر آئیں گے بلکہ ملک کے لئے کثیر زرِ مبادلہ بھی فراہم کیا جا سکے گا۔ یہ طیارہ اس وقت بہت سے ممالک بشمول سعودی عرب، عمان ، ایران اورجنوبی افریقہ میں استعمال کیا جا رہا ہے۔ ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں