اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)عمران خان کے پاس 2018کے انتخابات جیتنے کیلئے تمام لوازمات موجود ہیں ، بس جھولی سے اٹھا کر تاج سر پر پہننا ہے، سینئر تجزیہ کار و صحافی سہیل وڑائچ اور کالم نگار ہارون الرشید کی نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو ۔ تفصیلات کے مطابق

نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر کالم نگار ہارون الرشید کا کہنا تھا کہ عمران خان کے خلاف پروپیگنڈے بے معنی ہیں، مخالفین کپتان کی نفسیات کو نہیں سمجھ پائے، پانامہ میں اگر مطلوبہ اہداف حاصل نہ ہو سکے تو عمران خان کسی دوسرے ایشو کیساتھ عوام کے درمیان ہو نگے۔ انہوں نے انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان کے پاس وہ تمام لوازمات موجود ہیں جو انہیں آئندہ انتخابات جیتنے میں مدد دے سکتے ہیں اگر وہ تھوڑی توجہ دیں، ان کا کہنا تھا کہ باورچی خانہ میں تمام چیزیں موجود ہیں اب یہ عمران خان پر ہے کہ وہ کیسے ڈش تیار کرتے ہیں نہیں تو پھر کینٹین سے کھانا کھانا پڑے گا، اس دوران سینئر صحافی و تجزیہ کار سہیل وڑائچ نے ہارون الرشید کی بات کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ تاج عمران خان کی جھولی میں رکھا ہوا ہے بس سر پر اٹھا کر پہننے کی دیر ہے۔ ہارون الرشید کا کہنا تھاانہوں نے کہا کہ اگر آئندہ انتخابات میں پی ٹی آئی حکومت نہ بھی بنا سکے تو وہ سب سے بڑی اپوزیشن جماعت کے طور پر نظر آئیں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ موجودہ منظر نامہ میں بڑی سیاسی جماعتیں اذکارِ رفتہ ہو چکی ہیں جنہیں تاریخ کے کوڑے دان میں ڈال دیا جائے گا ۔ یہ اب عمران خان پر ہے کہ ان کی قسمت میں اقتدار ہے کہ نہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں