>لاہور(آئی این پی)پنجاب یونیورسٹی میں طلبہ کے مابین ہونے والے تصادم کے بعد انتظامیہ نے سیاسی، مذہبی اور سماجی شخصیات کے جامعہ میں داخلے پر پابندی عائد کر دی۔پنجاب یونیورسٹی طلبہ تصادم کیس میں یونیورسٹی انتظامیہ نے ابتدائی رپورٹ اور سفارشات پر مبنی ضابطہ اخلاق جاری کردیا۔ضابطہ اخلاق کے مطابق داخلے کے وقت والدین بچے کی سیاسی یا لسانی سرگرمیوں میں ملوث نہ ہونے کا حلفیہ بیان جمع

کروائیں گے۔یونیورسٹی انتظامیہ نے ادارے کی حدود میں طلبہ کی طرف سے ہر طرح کی تقریب کے انعقاد پر پابندی کا فیصلہ کرلیا ہے،طلبہ کی جانب سے ہر قسم کے نعروں پر بھی پابندی ہو گی جبکہ یونیورسٹی ہاسٹلز میں طلبہ کے مہمانوں کے داخلہ پر بھی پابندی عائد ہوگی۔ضابطہ اخلاق کے مطابق تمام شعبہ جات کے سربراہان سیاسی اور لسانی معاملات میں ملوث طلبہ کی فہرست یونیورسٹی انتظامیہ کو مہیا کریں گے۔<

اپنا تبصرہ بھیجیں