>نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی ریاست گجرات میںپانچ ہزار ہندووں نے ایک مسلم رہائشی علاقے پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں ایک مسلمان جاں بحق جبکہ 14زخمی ہوگئے،انتہاپسندوں نے مسلمانوں کے درجنوں مکانات بھی نذر آتش کر دیے،مسلم برادری کے ارکان نے بھی اس دوران پتھراو¿ کیا جب کہ پولیس کو ان فسادات کو روکنے کے لیے آنسو گیس کا استعمال کرنا پڑا۔بھارتی ٹی وی کے مطابق بتایا گیا ہے کہ پانچ ہزار

ہندووں نے ایک مسلم رہائشی علاقے پر حملہ کیا اور وہاں درجنوں مکانات نذر آتش کر دیے۔ پتن ضلع کے ایک گاو¿ں میں یہ فسادات اس وقت شروع ہوئے جب ہندو طلبہ کی جانب سے مسلمان طلبہ پر بدتمیزی کا الزام عائد کیا گیا۔مسلم برادری کے ارکان نے بھی اس دوران پتھراو کیا جب کہ پولیس کو ان فسادات کو روکنے کے لیے آنسو گیس کا استعمال کرنا پڑا۔ گجرات میں اس سے قبل بھی مذہبی فسادات سینکڑوں افراد کی جان لے چکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں