اسلام آباد(آئی این پی)عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ اس دفعہ 23مارچ کو نیا پاکستان بننے جارہا ہے،جمہوریت کے نام پر دنیا کی سب سے بڑی ڈکٹیٹر شپ پاکستان میں قائم ہے،پی ایس ایل میں فکسنگ نجم سیٹھی کاگھر کا معاملہ ہے،ماموں جانے اور بھانجا جانے،ہم تنقید کرنے والے کون ہوتے ہیں۔وہ منگل کو پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔انہوں نے کہا کہ جس ملک کے وزیراعظم کا

عدالت میں کیس لگا ہو،وہاں کیا حال ہوگا،پورا معاشرہ کرپٹ ہوچکا ہے،فوجی عدالتوں کو ماضی میں بھی تمام سیاسی جماعتوں نے سپورٹ کیا اب بھی سب حمایت کر رہے ہیں،23مارچ کو نیا پاکستان بننے جارہا ہے۔شیخ رشید احمد نے کہا کہ کسی بے گناہ کو نہیں اٹھانا چاہیے،قانون کا درست استعمال بے حد ضروری ہے،یہاں پر کام کیلئے فوج کی ضرورت پڑتی ہے،دہشتگردی کا خاتمہ کرنا ہو یا مردم شماری کرانا ہو،فوجی جوان درکار ہوتے ہیں،دہشتگردی کے مکمل خاتمے کیلئے فوجی عدالتیں ضروری ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں عام آدمی کو سالمیت تحفظ اور روزگار کا خطرہ لاحق ہے،ایک پریڈ سے مسئلے حل نہیں ہوں گے،جمہوریت کے نام پر سب سے بڑی ڈکٹیٹر شپ پاکستان میں قائم ہے۔انون کا درست استعمال بے حد ضروری ہے،یہاں پر کام کیلئے فوج کی ضرورت پڑتی ہے،دہشتگردی کا خاتمہ کرنا ہو یا مردم شماری کرانا ہو،فوجی جوان درکار ہوتے ہیں،دہشتگردی کے مکمل خاتمے کیلئے فوجی عدالتیں ضروری ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں عام آدمی کو سالمیت تحفظ اور روزگار کا خطرہ لاحق ہے،ایک پریڈ سے مسئلے حل نہیں ہوں گے،جمہوریت کے نام پر سب سے بڑی ڈکٹیٹر شپ پاکستان میں قائم ہے۔انہوں نے کہا کہ پی ایس ایل میں فکسنگ کا معاملہ نجم سیٹھی کا گھر کا معاملہ ہے ماموں جانے یا بھانجا ہم تنقید کرنے والے کون ہوتے ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں