کراچی(این این آئی)ایم کیوایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار حراست میں لئے جانے کے بعد رہا تو ہوگئے مگر ان کے خلاف 20سے زائد مقدمات میں تفتیش کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے، ایس ایس پی ملیر راؤ انوارکا کہناہے کہ عدالت کا حکم ہوا تو فاروق ستار سمیت دیگر ایم کیوایم رہنماؤں کو حراست میں لیا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق کراچی میں ایم کیوایم پاکستان کے مرکزی رہنماں پر گرفتاریوں کے سائے منڈلانے لگے، سائٹ

سپر ہائی وے ، قائد آباد،اسٹیل ٹاؤن تھانوں میں درج مقدمات میں ایم کیوایم پاکستان کے سربراہ فاروق ستار، خواجہ اظہار الحسن اور دیگر بھی نامزد ہیں، جس کی تفتیش اب ایس ایس پی ملیر راؤ انوار کریں گے۔ہفتہ کو یہاں میڈیا سے بات چیت میں ایس ایس پی ملیر راؤ انوارنے کہاہے کہ ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار اور دیگر کے خلاف ضلع ملیر میں درج 20سے زائد مقدمات کی تفتیش قانون کے مطابق کی جائے گی

اپنا تبصرہ بھیجیں