گوہاٹی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک ٹی وی شو سے راتوں رات شہرت کی بلندیوں پر پہنچنے والی معروف مسلمان گلوکارہ کیخلاف 42 سے زائد علما کرام نے فتوے جاری کر دیئے۔ تفصیلات کے مطابق انڈین آئیڈل شو میں سیکنڈ رنر اپ 16 سالہ ناہید آفرین نے 25 مارچ کو آسام کے ایک کالج میں پرفارم کرنا تھا۔ اس بات سے ناراض ہو کر ہندوستان کے علما کرام نے ناہید اور

انتظامیہ کے نام کل 46 فتوے جاری کر دیئے۔ اس حوالے سے گلوکارہ کا کہنا ہے کہ میں کسی سے نہیں ڈرتی ۔فتووں میں لکھا گیا ہے کہ اس طرح کے گانے بجانے کا پروگرام مکمل طور پر شریعت کے خلاف ہے۔ تاہم اس پورے معاملے پر پولیس افسران کا کہنا ہے کہ ناہید نے حال ہی میں دہشت گردی جس میں آئی ایس ٹیرر گروپ بھی شامل ہے، کے خلاف کچھ نغمے پرفارم کئے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں